’’ستر سالہ پیر اور چودہ سالہ بچی‘‘ شیطان پیر کے درپر لٹنے والی معصوم لڑکی کی شرمناک داستان۔۔پڑھ کر آپ کے بھی رونگٹے کھڑے ہو جائیں گے

انسانیت کا جامہ اُتارنے والا انسان جنات سے بڑا شیطان بن جاتا ہے.مذہب کا لبادہ اوڑھ کر پیری مریدی کا ڈرامہ رچانے والا نہ تو سچا عامل ہوسکتا ہے نہ راہبر .وہ لٹیرا اور درندہ ہوتا ہے.میں جس شیطان پیرکی کہانی آپ کو سنا رہاہوں یہ بالکل سچی ہے .

وہ لاہور کے ایک پیر خانے کا بزرگ ہے ،۔لاہور میں بھی اور کراچی میں بھی اسکا بڑا آستانہ ہے ،ستر سال کی عمر ،سفید خشخشی داڑھی میں کوئی ایک نظر اسکے اندر کی خباثت کو نہیں پہچان سکتا.ہمارے لوگ ایسے صاحبان کوانتہائی محترم جانتے ہیں جو دستار داڑھی اور تسبیح سے مسلح و مرص

Open

%d bloggers like this: